14 August Poetry In Urdu 2022 Independence Day Poetry

Poetry In Urdu is sharing 14 August Poetry In Urdu 2022 Independence Day Poetry with you in Urdu and Roman Urdu. Best 14 August shayari 2022

14 August is very special day for every Pakistani because its the independence Day of Islamic Republic Of Pakistan.

I wish my every Pakistani a Happy Independence Day with these amazing 14 August Urdu Poetry or Shayari.

14 August Poetry In Urdu 2022 Independence Day Poetry

خٌدا کَرے میری ارضِ پاک پہ اٌترے وہ فصّلِ گٌل جِسے اندیشہِ زوال نہ ہو

یہاں جو پھول کھِلے وہ کھِلا رہے صدیوں یہاں خزاں کو بھی گٌزرنے کی مجال نہ ہو

Khuda karw meri Arz-e-Pak py utray Woh fasal e gul jisay andesha e zawal na ho

Yahan jo phool khilay woh khila rahay saddyoun Yahan khizan ko bhi guzarnay ky majal na ho ——————————————————–

اے ارضِ وطن آج بھی اپنا یہ عہد ہے

ہم حرفِ وفا خون سے تحریر کریں گے

Aye arz e watan aaj bhi apna yeh ehad hai

Hum harf e wafa khon say tehreer karain gyn

——————————————————–

مَرتے ہیں اٹھتے ہیں اور جھٌکتے نہیں

اے میرے وطن تیرے یہ لال بِکتے نہیں

Martay hain uthtay hain aur jhuktay nahi

Aye mery watan tery ye lal biktay nahi

——————————————————–

ہم اپنی سانسیں تیرے نام کرتے ہیں

اے وطن ہم تیری عظمت کو سلام کرتے ہیں

Hum apni sansain teray

naam kartay hain Aye watan teri azmat ko salam kartay hain

——————————————————–

نظر بٌری ڈالی اگر تٌم نے میری ارضِ پاک پر میرا وعدہ ہے

اے دٌشمن، تیری ہستی مِٹا دیں گے

Nazar burrri daali agar tum nay meri arz e pak par

Mera wada hai aye dushman teri hasti mita dain gaiy


14 August Poetry In Urdu 2021 Independence Day Poetry

14 August Poetry In Urdu 2022 Independence Day Poetry

ہماری خاک سے خوشبو وطن کی آۓگی

ہمارا خون ہے شامل اِس وطن کی مٹی میں

Hamari khak say khushboo watan ki aaye gye

Hamara khon hai shamil iss watan ki miti mein

——————————————————–

ہے جٌرم اگر وطن کی مِٹی سے

مٌحبّت یہ جٌرم سدّا میرے حسابوں میں رہے گا

Hai jurm agar watan ki mitti say muhabbat

Yeh jurm sada mery hisabon main rahy ga

——————————————————–

قبروں میں نہیں ہم کو کِتابوں میں اٌتارو ہم

لوگ مٌحبّت کی کہانی میں مَرے ہیں

Qabaron main nahi ham ko kitabon main uttaro Ham log

muhabbat ki kahani main maray hain

——————————————————–

یوں دی ہمیں آزادی کے دنیا ہوئی

حیران اے قائد اعظمم تیرا احسان ہے احسان

Yu Dy Humein Azadi ky Duniya huwe Heran Ay

Quaid E Azam Tera Ehsan Ha Ehsan

___________________________________

کابرون میں نہیں ہم کو کتابوں میں اتارو ہم لوگ محبت کی کہانی میں ماری حاین جشن آزادی مبارک

Kabroon me Nahi Hum ko Kitaboon me Utaro Hum log Muhabat ki Kahani me Mary Hain… Jashn-e-Azadi Mubarak

14 August Poetry In Urdu 2 Lines 2022

تم ہو ایک زندہ و جاوید روایت کے چراغ تم کوئی شام کا سورج ہو جو ڈھل جاؤ جی… 14 اگست مبارک ہو !

Tum Ho Aik Zinda o Javaid Rawayat k Charagh Tum Koi Sham ka Sooraj ho jo Dhal Jao gy… 14 August Mubarak Ho! _____________________________________

زالزالو کی نا دسترس ہو کبھی اے وطن تیری یستاکامت تک ہم پہ گراریں کایامتیں لیکن تو سلامت رہے قیامت تک . ( آمین )

Zalzalo Ki Na Dastaras Ho Kabhi Ay Watan Teri Istakamat Tak Hum Pe Guzrain Kayamtain Lekin Tu Salamat Rahy Kayamat Tak. (Ameen) _____________________________________

ہم نے تو مٹ جانا ہے اے ارزی وطن لیکن تم کو سلامت رہنا ہے قیامت کی سحر ہونے تک .

Hum ney tou mit jana hai Ay Arzy Watan Lekin Tom ko salamat rehna hai Qayaamat ki Sehar hone tk.

___________________________________

Mrty Hain Uthty Hain Jhukty Nahi Ae Mery Watan Tery Ye Laal Bikty Nahi

مرتی ہیں اتحتی ہیں جحوکتی نہیں اے میرے وطن تیرے یہ لال بیکتی نہیں


“چاند روشن چمکتا ستارہ رہے سب سے اونچا یہ پرچم ہمارا رہے”

Chand Roshan Chumkata Sitara Rahe Sub Se Uonhce Yeh Perchum Hamara Rahe ______________________________________

14 August Poetry In Urdu 2 Lines 2022

“حوم تو مٹ جائیں گے اے عرض وطن لیکن تم زندہ رہنا ہا قیامت کی سحر ہونے تاک”

Hum Tu Mit Jaien Gey Ae Arz-e-Watan Lekin Tum Zinda Rahna ha Qayamat ki Seher Hone Tak

______________________________________

خودا کری کے میری یرز پاک پہ اترے وہ فصل گل جسے اندیشا زوال نا ہو

Khuda Kre k Meri Erz e Pak pe Utre Woh Fasal e Gul Jise Andisha e Zawal Na Ho

______________________________________ اے راہ حق کے شہیدو ، وفا کی تصویروں تمہیں وطن کی ہوائیں سلام کہتی ہیں

Aye Rah-e-Huq K Shahido, Wafa Ki Tasveerow Tumhein Watan Ki Hawaien Salam Kahti Hain

______________________________________ اس پرچم کے سائے تلے ہم ایک ہم ایک ہیں سانجھی اپنی خوشیاں اور غم ایک ہیں ایک ہیں

Is Perchum k Siyee Tale Hum Aik Hum Aik Hain  Sanjhi Apni Khushiaa Aur Ghum Aik Hain Aik Hain ______________________________________

یہ وطن تمہارا ہے تم ہو پاسبان اِس کے یہ چمن تمہارا ہا ، تم ہو نغمہ خواہ اِس کے

Yeh Watan Tumhara Ha Tum Ho Pasban Is ky Yeh Chaman Tumhara Ha, Tum Ho Naghma Khawa Is Ky

14 August Poetry In Urdu 2 Lines 2022

______________________________________ پاکستان کو سمجھو لوگوں ، پاکستان خدا کا ہا نام محمد ( صلی اللہ علیہ وسلم ) کی تاثیر ، کٹ گئی اک اک زنجیر اِس کا تصور اِس کا کامییر ، ایمان اور وفا کا ہے پاکستان کو سمجھو لوگوں ، پاکستان خدا کا ہا اِس پر آنکھ جو اٹھی ہے ، خود برسوں تک روئی ہے یہاں کا ہر فرد سپاھی ہے ، اور جانباز بلا کا ہے پاکستان کو سمجھو لوگوں ، پاکستان خدا کا ہے ہیپی انڈیپینڈنس ڈے !

Pakistan Ko Samjho Logo, Pakistan Khuda Ka Ha Nam-e-Muhammad (SAWW) ki Taseer, Kat Gai Ek Ek Zanjeer Is ka Tasawar is ka Kameer, Eman or Wafa ka hai Pakistan Ko Smjho Logo, Pakistan Khuda Ka Ha Is per Ankh Jo Uthi hai, Khud Barsoon Tak Roi hai Yahan Ka her Fard Sipahi Hai, Or Janbaz Bala ka hai Pakistan ko Smjho Logo, Pakistan Khuda ka Hai Happy Independence Day

——————————————————–

ہر سمت مسلمانوں پہ چھائی تھی تباہی ملک اپنا تھا اور غیروں کے ہاتھوں میں تھی شاہی ایسے میں اُٹھا دین محمد کا سپاہی اور نعرہ تکبیر سے دی تو نے گواہی اسلام کا جھنڈا لیے آیا سر میدان

Har Simat Musalmo py chye the tabhai Mulk apna tha or gheron ky hathon mein the shahe Ese mein Utha Deen E Muhammad(S.A.W) ka sipehe Or naara E Takbeer sy dy tu ny gawahe Islam ka jhanda lye aya sar e medan


14 August Poetry In Urdu 2021 Independence Day Poetry

دیکھا تھا جو اقبال نے اک خواب سہانا اس خواب کو اک روز حقیقت ہے بنانا یہ سوچا جو تو نے تو ہنسا تجھ پہ زمانہ ہر چال سے چاہا تجھے دشمن نے ہرانا مارا وہ تم نے داؤ کہ دشمن بھی گیے مان

——————————————————–

لڑنے کا دشمنوں سے عجب ڈھنگ نکالا نہ توپ نہ بندوق نہ تلوار نہ بالا سچائی کے انمول اصولوں کو سنبھالا جناح تیرے پیغام میں جادو تھا نرالا ایمان والے چل پڑے سن کر تیرا فرمان

——————————————————–

پنجاب سے بنگال سے جوان چل پڑے سندھی بلوچی سرحدی پٹھان چل پڑے گھر بار چھوڑ بے سروسامان چل پڑے ساتھ اپنے مہاجر لیے قرآن چل پڑے اور قائد ملت بھی چلے ہونے کو قربان

——————————————————–

نقشہ بدل کے رکھ دیا اس ملک کا تم نے سایہ تھا محمد کا علی کا تیرے سر پہ دنیا سے کہا تم نے کوئی ہم سے نہ اُلجھے لکھا ہے اس زمیں پر شہیدوں نے لہو سے آزاد تھے آزاد رہیں گے یہ مسلمان

——————————————————–

ہے آج تک ہمیں وہ قیامت کی گھڑی یاد میت پہ تیری چیخ کے جو ہم نے کی فریاد بولی یہ تیری روح کہ نہ سمجھو اسے اسلام زندہ ہوتا ہے ہر کربلا کے بعد اسلام زندہ ہوتا ہے ہر کربلا کے بعد گر وقت پڑے ملک پہ ہو جایئے قربان


14 August Poetry In Urdu 2021 Independence Day Poetry

ہم زندہ قوم ہیں

ہم زندہ قوم ہیں پائندہ قوم ہیں ہم سب کی یہ پہچان ہم سب کا پاکستان پاکستان

ہر دل کے افق پر ہے چاند ایک ستارہ ایک ہے کلمہ بھی واحد،پرچم بھی ہمارا ایک ہم یک دل یک جان

اخلاص یقین تنظیم ہے ملت کا منشور ہر چارہ ومنزل پہ،ملت کے دل کا نور اللہ نبی قرآن

اسلام کے لشکرمیں ہے قاسم سا فرزند اس ملک و ملت میں بچے بھی قٖاری و قامند بوڑھے بھی چری کمان

ہم زندہ قوم ہیں پائندہ قوم ہیں پم سب کی یہ پہچان ہم سب کا پاکستان

Read Also :- Love Poetry In Urdu Romantic Poetry 2 Line

If you like our14 August Poetry In Urdu 2021 Independence Day Poetry the best Urdu Shayari collection about 14 August Independence Day than share it with your friends, and your love ones, and especially share it on Facebook.

Thanks For Reading this 14 August Poetry In Urdu 2022 Independence Day Poetry.

Also Read : 15 August Status In Hindi | Happy Independence Day shayari

Leave a Comment